• نرسری {بارنے ہاگے}، پراِئمری سکول اور ہائی سکول کھلے رہیں گے۔ والدین اور طالب علموں کو سکول کی طرف سے اوقات کار کے بارے میں آگاہ کر دیا جائے گا۔ یہ بہت ضروری ہے کہ بچے سکول آئیں تا کہ ان کو وہ تعلیم مل سکے جس کی انہیں ضرورت ہے۔ ایسا ممکن ہے کہ آپ کے بچے کے سکول کے اپنے قواعد و ضوابط ہوں۔
  • فارغ وقت تفریحی سرگرمیاں جیسا کہ فٹ بال، ہینڈ بال، بینڈ اور باجے کی 20 سال سے کم عمر کے بچوں اور نوجوانوں کو سرگرمیاں جاری رکھنے کی اجازت ہے۔
  • کالجز میں اب ذیادہ تر تعلیم گھر سے ہو گی۔
  • ایسی دوکانیں جن کو قانون میں استثناء حاصل نہِیں ہے، بند رہیں گی۔ البتہ ایسا ماحول بنانے کی اجازت ہے کہ گاہک دوکان کے باہر سے ہی اپنی اشیاء موصول کر سکے۔
  • کھانا پیش کرنے والی تمام دوکانیں یعنی ریسٹورینٹس وغیرہ بند رہیں گی۔ ٹیک اوے کی اجازت ہے۔
  • لائیبرریاں کھلی رہیں گی۔
  • مذہبی عمارتیں کھلی رہیں گی۔ یہ مذہبی خدمات اور با جماعت نماز کے لیے نہیں کھلیں گی بلکہ صرف جنازوں اور تدفین کے لیے کھولی جا رہی ہیں جن میں افراد کے جمع ہونے کی حد تعداد 50 افراد ہے۔ تدفین کے بعد کسی قسم کی اجتمائی سوگ کی تقریب کی اجازت نہیں ہے۔
  • ٹریننگ سنٹرز بند رہیں گے۔ اکیلے ورزش/تربیت اور بحالی کے لیے ورزش کی اجازت ہو گی۔
  • عوامی ذرائع مواصلات کے استعمال سے گریز کریں۔
  • جن کے لیے ممکن ہو وہ گھر سے کام کریں۔
  • جہاں آپ رہتے ہیں اس کے علاوہ اگر باہر کہیں ایک میٹر کا فاصلہ برقرار رکھنا ممکن نہ ہوتو ماسک کا استعمال یاد رکھیں۔
  • تقریبات پر پابندی کے قواعد و ضوابط ابھی بھی لاگو ہیں۔
  • مہمان بلانے کی اجازت ہے لیکن کسی گھر میں دس سے ذائد افراد کے اکٹھا ہونے کی اجازت نہیں ہے اور گھر کے اندر ایک میٹر کا فاصلہ برقرار رکھنے کی گنجائش کا ہونا لازمی ہے۔ یہ قانون گارڈن اور پارکس میں بھی لاگو ہوتا ہے۔
  • اگر آپ بیمار ہیں تو گھر میں رہیں، اچھی طرح سے ہاتھ دھوئیں، اگر آپ کو علامات ہیں تو ٹیسٹ کرواہیں۔
  • یاد رکھیں کہ ٹیسٹ مفت ہے۔

 

تقریبات اور نجی معافل

کھلی فضا میں تقریبات۔ نجی معافل ایک کھلی فضا میں تقریب ہے اور ایک ہی وقت میں صرف دس افراد تک کے اکٹھا ہونے کی اجازت ہے۔

ذیادہ تر اندرونی تقریبات ممنوع ہیں لیکن کچھ اجازت ہے۔

 .1جنازے اور تدفین میں 50 سے کم افراد کی موجودگی۔ ایسے تمام افراد جو اکٹھے نہیں رہتے ان کو لازمی ایک میٹر کا فاصلہ رکھنا ہو گا۔

.2 میچز، مقابلے، پرفارمنس/کارکردگی اور اس سے ملتی جلتی تقریبات پیشہ ور افراد کے ساتھ اور تماشائیوں کی غیرموجودگی میں ہوں گی۔

.3 بپتسما ، شادی و نکاح اور اس سے ملتی جلتی تقریبات، بغیر حاضرین کےہوں گی۔

.4 پانچ افراد سے کم افراد کی موجودگی میں چھوٹی ڈیجیٹل تقریبات، اس کے علاوہ ضروری پیداواری عملہ۔ تمام افراد لازمی ایک میٹر کا فاصلہ رکھیں گے۔

 

اپنے گھر، باہر یا اندرمنعقد نجی معافل

  • دس افراد سے ذائدکے ایک جگہ اکٹھا ہونے کی اجازت نہیں ہے، اور یہ رائے دی جاتی ہے کہ اس طرح کی تقریبات اور معافل سے اجتناب کریں۔۔  یاد رکھیں کہ تمام افراد کے لیے ایک دوسرے سے ایک میٹر کا فاصلہ برقرار رکھنا ممکن ہو۔

قرنطینہ ۔ اگر آپ کسی ایسے فرد کے قریب رہے ہیں جو کہ وبا کا شکار ہے یا بیرون ملک سے آیا ہے

  • اگر آپ کسی ایسے فرد کے قریب رہے ہیں جو کہ وبا کا شکار ہے یا نیرون ملک سے آیا ہے تو آپ نے 10 دن کا قرنطینہ کرنا ہے۔
  • آگر آپ کو علامات ہیں تو آپ نے کورونا کا ٹیسٹ کروانا ہے۔
  • اگر ٹیسٹ کا نتیجہ منفی یعنی یہ بھی نکلے کہ آپ کورونا کا شکار نہیں ہیں تب بھی آپ نے قرنطینہ میں رہنا ہے۔ جن افراد کے ساتھ آپ رہائش پذیر ہیں انہیں قرنطینہ کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔

ان 10 دنوں میں آپ نہیں کر سکتے۔

  • سکول، کام اور دوسروں سے ملنے جانا یا کسی مہمان کو بلانا
  • بس، ٹرین۔ تھے بان یا ٹرام کے ذریعہ سفرکرنا

آپ کر سکتے ہیں۔

  • ہوا خوری کے لیے اکیلے یا جن کے ساتھ آپ رہتے ہیں جا سکتے ہیں۔ آپ اگر اشد ضروری ہو توآپ دوکان پر جا سکتے ہیں لیکن مناسب یہی ہے کہ کوئی دوسرا آپ کے لیے خریداری کرے۔

اگرآپ کوقرنطینہ کے دوران کھانسی کی شکایت ہویا زکام کی علامات ہوں تو آپ نے آپنے اپ کو مکمل الگ تھلگ کر لینا ہے اور کورونا ٹیست کروانا ہے۔

الگ تھلگ ہونا { آئیسولیشن } ۔ اگر آپ کورونا کا شکار ہیں یا آپ کو کورونا کی علامات ہیں

  • جب آپ الگ تھلگ ہیں یعنی ائسولیٹ ہیں تو آپ نے کسی کے قریب نہیں جانا۔ اپنے گھر والوں کے قریب بھی نہیں۔
  • اپنے آپ کو اپنے کمرے میں معدود رکھیں۔ اپنا علیحدہ باتھ روم اور تولیہ استعمال کریں۔
  • اگر آپ اپنے گھر میں خود الگ تھلگ یعنی آیسولیٹ نہیں کر سکتے تو اپنی مقامی بلدیہ { bydel } سے رابطہ کریں جو آپ کی مدد کریں گے کہ آپ کو کوئی ایسی جگہ مہیا کر سکیں جہاں پر آپ الگ تھلگ یعنی آئیسولیٹ رہ سکتے ہیں۔
  • اگر آپ شدید بیمار ہو جاتے ہیں تو اپنے ڈاکٹر سے رابطہ کریں یا ایمرجنسی { legevakt } سے 116 117 پرفون کریں۔ اگر جان کا خطرہ ہو تو 113 پر فون کریں۔

مفت کورونا ٹیسٹ

آپ ضرور ٹیسٹ کروائیں اگرآپ کو۔

  • کھانسی لگے
  • چکھنے یا سونگھنے کی صلاحیت کم پڑجائے
  • ذکام ہو
  • اگر کسی ایسے فرد کے قریب رہے ہوں جسے کورونا ہوا ہو
  • کورونا ٹیسٹ ہمیشہ مفت ہوتا ہے
  • آپ اپنے ڈاکٹر کے پاس کورونا ٹیسٹ بک کرا سکتے ہیں یا بلدیہ { kommune } کی ویب سائٹ oslo.kommune.no پر یا بلدیہ { kommune } کے کورونا ٹیلی فون 21 80 21 82 پر۔ کورونا ٹیلی فون آپ کو آپ کے سوالات کی مدد فراہم کر سکتا ہے۔

بلدیہ { kommune } کی ویب سائٹ { صرف نارویجین اور انگلش میں } پر کورونا ٹیسٹ بک کروانے آپ کو بینک آئی ڈی {BankID} یا میری آئی ڈی { MinID } درکار ہو گی۔

کورونا ٹیسٹ کا نتیجہ

  • اگر ٹیسٹ کا نتیجہ یہ نکلتا ہے کہ آپ کورونا کا شکار ہیں تو آپ کے ساتھ ٹیلی فون پر رابطہ کیا جائے گا۔
  • اگر آپ سے رابطہ نہیں کیا گیا تو آپ helsenorge.no پر لاگ ان ہوں { بینک آَئی ڈی BankID یا میری آئی ڈی MinID درکار ہے } یا نتیجہ معلوم کرنے کے لیے کورونا ٹیلی فون پر فون کریں۔

کورونا ٹیلی فون۔ 21 80 21 82

یہاں پر آپ۔

  • ٹیسٹ بک کروا سکتے ہیں۔
  • کورونا کے حوالہ سے راہنمائی یا مشورہ لے سکتے ہیں۔
  • کورونا کے حافظتی ٹیکہ کے بارے میں مزید معلومات لے سکتے ہیں { ویکسین یعنی حفاظتی ٹیکہ کے سوالات کے لیے 3 کا بٹن دبائیں }

آپ کو آپ کی اپنی زبان میں مدد مل سکتی ہے۔ اگر آپ کو سانس کی نالیوں کی سنگین علامات ہیں تو اپنے ڈاکٹر کوفون کریں۔ اگر ڈاکٹر حاضر نہیں ہے اور مدد کے لیے انتظار ممکن نہیں ہے تو ایمرجنسی { legevakt } کو 116117 پر فون کریں۔ آگر جان لیوا بیماری ہے تو 113 پر فون کریں۔

اوقات کار

  • سوموار تا جمعہ۔ 08:30 تا 15:00
  • ہفتہ تا اتوار۔      09:00 تا 15:00

کورونا ویکسین { حفاظتی ٹیکہ }

ویکسینشن { حفاظتی ٹیکہ } کورونا کی سنگین بیماری سے بچاتی ہے

وکسینیشن { حفاظتی ٹیکہ } مفت اور معفوظ ہے۔

عام مظر اثرات بہت ہلکے ہیں اور چند دنوں میں ختم ہو جاتے ہیں۔ جب آپ کی حفاظتی ٹیکہ لگوانے کی باری آئے گی تو  آپ سے آپ کی مقامی بلدیہ { bydel } کی طرف سے رابطہ کیا جائے گا اور وقت طے کیا جائے گا۔ آپ حفاظتی ٹیکہ مرکز پر وقت مقرر کیے بغیر نہیں جا سکتے۔ 

یاد سے اپنی معلومات برائے رابطہ کو norge.no/oppdater-kontaktinformasjon پر جا کر اپ ڈیٹ کریں۔

انفیکشن یا وائرس کی تلاش

اگر آپ کورونا کا شکار ہیں تو ہمارے لیے یہ جاننا انتہائی اہم ہے کہ آپ پچھلے دنوں کن افراد کے قریب رہے ہیں۔ یہ اس لیے ضروری ہے کہ دوسروں کو وبا کا شکار ہونے سے بچایا جا سکے۔

ہم ان تمام افراد سے رابطہ کرتے جن سے آپ ملے ہیں یا جن کے قریب رہے ہیں۔ ان کو یہ نہیں بتایا جاتا کہ ان کو کس نے ممکنہ طور پر وبا کا شکار بنایا ہے۔ جن افراد سے رابطہ کیا جاتا ہے ان تمام افراد کو اس دن سے جس دن وہ وبا کا شکار فرد سے ملے تھے 10 دن کے لیے قرنطینہ میں ڈالا جاتا ہے۔ ان کو کورونا کا ایک ٹیسٹ بحی کروانا پڑتا ہے۔

Corona information - step by step

کورونا کے متعلق معلومات ۔ درجہ بدرجہ/ ترتیب وار ۔ (PDF 1,3MB)

یہاں پر آپکو کورونا کے بارے میں آسانی سے وضاحت کی گئی معلومات
دستیاب ہیں ۔

انہیں گفتـگو کے دوران بطورِ مدد استعمال کریں یا کورونا کے متعلق
مزید سیکھنے کےلۓ ،مثلا" کورونا، انفیکشن سے متاّثر، انفیکشن
کنٹرول ، ویکسین اور نفسیاتی/ ذہنی صحت ۔

Videos

Posters

Images for infoscreens

Information sheets